کاشتکاروں کو ایک اور نقصان،مکئی کی مارکیٹ کریش کر گئی ،40 ارب روپے سے زائد کا نقصان

پاکستان میں پنجاب سمیت پورے ملک میں مکئی کی مارکیٹ کریس ہونے سے کاشتکاروں کو 40 ارب روپے سے زائد کا نقصان ہو گیا ،اس مرتبہ پنجاب میں گزشتہ سال کی نسبت مکئی کی پیداوار زیادہ ہوئی ہے پنجاب میں 58 لاکھ ٹن سمیت ملک بھر میں اس مرتبہ 65 لاکھ لاکھ ٹن مکئی کی فصل پیدا ہوئی ہے اس وقت کسانوں کو مکئی کی فروخت میں بھاری خسارہ ہورہا ہے ۔بروکر اور کمیشن ایجنٹس کسانوں سے 930 روپے فی من تک مکئی خرید کر اسے 1050 روپے فی من قیمت پر فیڈ ملز کو فروخت کر رہے ہیں جبکہ رائس مل مالکان بڑے پیمانے پر سستی مکئی خرید کر ذخیرہ کر رہے ہیں تا کہ آنے والے دنوں میں فیڈ ملز کی طلب بڑھنے پر انہیں مہنگے داموں فروخت کیا جا سکے ،اس سے مڈل مین اور مل مالکان تو فائدہ اٹھا لیں گے لیکن کاشتکاروں کو بھاری نقصان اٹھانا پڑے گا

اپنا تبصرہ بھیجیں