حکومت نے آئندہ دو ہفتے تک ملک میں بین الاقوامی فضائی آپریشن معطل کر دیا

ترجمان پی آئی اے کے مطابق پابندی کا اطلاق ہفتہ 21 مارچ شب 8 بجے سے ہوگا،ترجمان پی آئی اے کا کہنا تھا کہ مسافروں کو پیش آنے والی دشواریوں کے لیے معذرت خواہ ہیں مگر پرہیز علاج سے بہتر ہے، مزید معلومات اور بکنگ کے تبدیلی کے لیے پی آئی اے کال سنٹر سے رابطہ کریں، فیصلہ وزیراعظم عمران خان کی مشاورت سے کیا گیا، فضائی آپریشن کرونا کی صورتحال کے پیش نظر بند کیا گیا، اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعظم  کے مشیر برائے قومی سلامتی معید یوسف نے بتایا کہ پابندی میں پسنجر چارٹر اور پرائیوٹ پروازیں شامل ہیں تاہم سفارت کار اور کارگو کے جہازوں کو پاکستان میں آنے کی اجازت ہوگی،ذرائع کا کہنا ہےکہ اس دوران پی آئی اے کی اندرونِ ملک پروازیں جاری رہیں گی جنہیں تاحال بند کرنے کا کوئی فیصلہ نہیں کیا،تزاہ ترین صورتحال کو جانچنے کے بعد اندرون ملک پروازوں کی بندش کرنے یا نہ کرنے سے متعلق فیصلہ کیا جائے گا

اپنا تبصرہ بھیجیں