رابی پیرزادہ نے ‘میرا جسم ،مرضی’ جیسے الفاظ کو شرک قراردیدیا

 معورف اداکارہ و گلوکارہ رابی پیرزادہ کا کہنا ہے کہ میرا جسم میری مرضی جیسے بے ہودہ اور غلیظ سلوگن پر بحث کو کیوں آگے بڑھایا جارہا ہے ، میرا جسم میری مرضی کے الفاظ شرک ہیں ۔اپنے ویڈیو بیان میں انہوں نے کہا کہ ایک انسان کا جسم اس کی مرضی کیسے ہو سکتا ہے ، جس شخص کی آنکھ خراب ہے کیا وہ اسے خود ٹھیک کر لے گا ، اگر کسی کو کینسر ہے تو کیا وہ اسے اپنے جسم سے نکال سکتا ہے ، ہم کس شکل کے پیدا ہوں گے ، ہمار ارنگ ،قداورخون کا گروپ کیا ہوگا کیاہمیں اس کا علم ہوتا ہے ، یہاں تک کہ ہم اپنا نام اپنی مرضی سے نہیں رکھ سکتے تو پھر میرا جسم میری مرضی کیسے ہو گیا ۔ انہوں نے کہا کہ یہ مہم ٹھیک ہے لیکن اس کا سلوگن ٹھیک نہیں ، میر اجسم میری مرضی نہیں ،اگر آپ نے عورتوں کے حقوق کے بارے میں بات کرنی ہے تو عورت کی تعلیم کے حقوق کے بارے میں بات کریں ، عورت کو اللہ تعالیٰ نے اتنا بڑا مقام دیا ہے کہ اس کے پیروں تلے جنت رکھ دی ، بھائی اپنی بہنوں کا تحفظ کرتے ہیں 

اپنا تبصرہ بھیجیں